Ministry of Planning
Development & Reform
News Alerts: وفاقی وزیر و ڈپٹی چئیرمین پلاننگ کمیشن احسن اقبال کی صدارت میں سنٹرل ڈیویلپمنٹ ورکنگ پارٹی کا اجلاس ---------- اجلاس میں وفاقی وزارتوں اور صوبائی محکموں کے اعلیٰ حکام کی شرکت ---------- سی ڈی ڈبلیو پی میں 61.9 ارب روپے سے زائد کے7ترقیاتی منصوبوں کی منظوری ---------- سی ڈی ڈبلیو پی نے چار میگا پراجیکٹس کو مزید منظوری کیلئے ایکنک بھجوادیا ---------- ترقیاتی منصوبوں میں ٹرانسپورٹ و کیمونیکیشن، آبی ذخائر، انفارمیشن ٹیکنالوجی ، ماس میڈیا، افرادی قوت اور اعلیٰ تعلیم کے منصوبے شامل ہیں ---------- سی ڈی ڈبلیو پی نے ٹرانسپورٹ سیکٹر میں 43.5 ارب روپے کے 2میگا پراجیکٹس کی منظوری دے دی ---------- ان منصوبوں میں ٹھوکر نیاز بیگ تا ہدیارہ ڈریں ملتان روڈ کی اپ گریڈیشن شامل ہے ---------- منصوبے کا بتدائی تخمینہ 10.3ارب روپے لگایا گیا ہے۔ ---------- منصوبے کے تحت موجودہ این 5 چار لین سڑک کی 11 کلو میٹر سیکشن کو اپ گریڈ کیا جائے گا ---------- منصوبے کیلئے اراضی کا حصول ٹیکسوں سے مستثنیٰ قرار دیا جائے، وفاقی وزیر احسن اقبال ---------- سی ڈی ڈبلیو پی نے جگلوٹ سکردو روڈ کی اپ گریڈیشن منصوبے کی منظوری دے دی منصوبے کا ابتدائی تخمینہ 33.13ارب روپے لگایا گیا ہے ---------- نیشنل ہائے وے اتھارٹی کے اس منصوبے کے تحت 164 کلو میٹر جگلوٹ سے سکردو ایس ۔1 شاہراہ کی اپ گریڈیشن کی جائے گی ---------- شاہراہ کی تعمیر سے سکردو اور گلگت بلتسان کے عوام کو بہتر سفری سہولیات میسر آئیں گی ---------- منصوبے پر تعمیراتی کا م شروع کرانے کیلئے فوری اقدامات کی جائے، وفاقی وزیر ---------- منصوبے کی ڈیزائنگ نقائص سے پاک ہو ، منصوبے کی لاگت کی تیسرے فریق سے توثیق کرائی جائے، وفاقی وزیر ---------- سی ڈی ڈبلیو پی میں وارسک کنال ری ماڈلنگ منصوبہ منظور منصوبے کا ابتدائی تخمینہ 12.14ارب روپے لگایا گیا ہے ---------- منصوبے کے تحت پشاور اور نوشہرہ کے اضلاع میں دریا کابل کےنہری نظام کو بہتر کیا جائے گا۔ ---------- آبی ذخائر کے منصوبوں کی فنڈنگ کے حوالے سے قومی اقتصادی کونسل کے 50/50فیصد فارمولے کو مد نظر رکھا جائے، وفاقی وزیر ---------- ایسے منصوبوں میں 50فیصد صوبائی حکومت جبکہ 50فیصد فنڈز کی ذمہ داری وفاق کی ہوگی، وفاقی وزیر ---------- سی ڈی ڈبلیو پی میں 10کروڑ روپے کی لاگت سے ایس سی او ٹیکنیکل ٹریننگ انسٹی ٹیوٹ گلگت بلتستان کے قیام کا منصوبہ منظور منصوبے کے تحت موجودہ اور روزگار کے نئے مواقعوں کے حوالے سے اعلیٰ معیارکی تربیت کیلئے تکنیکی ادارہ قائم کیا جائے گا ---------- اس منصوبوں سے گلگت بلتستان کے ہزاروں نوجوان کو جدید ٹیکنالوجیز کے بارے میں تربیت دی جائے گی اس ادارے کی عمارت کی تعمیر مقامی روائتی فن تعمیر کو مد نظر رکھ کر کیا جائے، احسن اقبال ---------- سی پیک کے تحت جاری فائبر آپٹک کا منصوبہ رواں سال دسمبر میں مکمل ہوگا جس سے یہ علاقے ایک نئے دور میں داخل ہوں گے، وفاقی وزیر ---------- فائبر آپٹک منصوبے کی تکمیل کیساتھ ساتھ گلگت بلتستان میں سافٹ وئیر پارک کے قیام پر کام شروع کیا جائے، احسن اقبال کی ہدایت ---------- سافٹ وئیر پارک کے قیام سے اس علاقے کے عوام انفارمیشن ٹیکنالوجی کے نئے دور سے مستفید ہوسکیں گے، احسن اقبال ---------- سی ڈی ڈبلیو پی نےسیاحت کے شعبے میں پنجاب ٹورازم و اکنامک گروتھ پراجیکٹ کی منظوری دیدی حکومت پنجاب کےاس منصوبے پر 5.7 ارب روپے کی لاگت آئے گی، منصوبہ ورلڈ بنک کے تعاون سے مکمل کیا جائے گا ---------- منصوبے کے تحت صوبہ پنجاب کے سیاحتی مقامات کو ترقی دینے اور آثار قدیمہ کو محفوظ بنایا جائے گا صوبے میں پہلے سےسیاحت کے شعبے میں کام کرنے والے اداروں کو اس منصوبے میں شامل کیا جائے ، وفاقی وزیر کی ہدایت ---------- سیاحت کو فروغ دینے وآثار قدیمہ کے تحفظ کیلئے تمام صوبے ماسٹر پلان بنائے، وفاقی وزیر احسن اقبال ---------- سیاحتی مقامات تک رسائی کیلئے سڑکوں و دیگرسہولیات کی تعمیر کیساتھ ساتھ معلومات کی فراہمی یقینی بنائی جائے، احسن اقبال ---------- سیاحتی مقامات کی مناسب تشہیر یقینی بنا کر دنیا بھر سے سیاحوں کومتوجہ کیا جائے، وفاقی وزیر ---------- سی ڈی ڈبلیو پی نے فاٹا اور خیبر پختونخوا کے نوجوانوں کی تکنیکی تربیت کا منصوبہ منظور کرلیا 78.6ملین روپے کے اس منصوبے کے تحت 1100نوجوانوں کو ٹیکنیکل ٹریننگ دی جائے گی ---------- سی ڈی ڈبلیو پی نے اعلیٰ تعلیم کے شعبے میں پیداواریت، معیار و جدت پراجیکٹ منطور کرلیا اعلیٰ تعلیم کے اس منصوبے پر 276.4ملین روپے کی لاگت آئے گی

Press Release

Federal Minister Ahsan Iqbal inaugurated Kamra Air...

Published : 6 July 2017

وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی و ترقی اح...


CDWP approves 178.3 billion for 17 development pro...

Published : 6 July 2017

Islamabad, July 06, 2017:- The Central Development Working Party has a...


INDUSTRIALIZATION UNDER CPEC NOT AT EXPENSE OF LOC...

Published : 4 July 2017

Islamabad (4 July 2017): Federal Minister for Planning, Developing & R...


سائنس ٹیلنٹ فارمنگ سکیم کے ...

Published : 4 July 2017

وزارت سائنس اینڈ ٹیکنالوجی میں اجلاس۔ ...


Productivity , Quality & Innovation are driver of sustainable economic growth

Dated : 10 January 2017

Islamabad, January 10, 2017: Federal Minister for Planning , Development and Reform Ahsan Iqbal said that productivity, quality and innovation are the core conditions of competitiveness of an economy and drivers of economic growth and development .
Ahsan Iqbal expressed these views while addressing to the inaugural session of productivity, quality and innovation (PQI) initiative of the government. The event was attended by renown scholars , business leaders and experts. Minister said that PQI will significantly contribute in a greater , greener and more sustainable type of growth . He further added that this initiative will promote competitiveness , growth and inventiveness in the country .
On this occasion Federal minister Ahsan Iqbal said that there is dire need to develop a synergy between government , academia and private sector to achieve PQI objectives . He stressed upon that productivity, quality and innovation (PQI) are the magic power that can turn country, cities and rural areas into attractive, dynamic and dignifying places to live and invest.
Mr. Ahsan Iqbal maintained that innovative and quality-oriented economies are more productive, resilient and adaptable to change and better able to support higher living standards. “Focus on productivity, quality and innovation can help in addressing economic, social and global challenges” said the minister.
Minister acknowledged sincere efforts of government and said that it is playing a key role in fostering a sound environment for productivity, quality and innovation , helping overcome current challenges. Therefore, 2017 is declared as the year of productivity, quality and innovation to become competitive in the international market. The Minister stressed to pledge to work harder, better and smarter in the year 2017.
He further added that Pakistan’s economy has improved with the recent efforts made by the government and the law and order situation across the country has also shown promising results as compared to the past. “The world now recognizes Pakistan as the next emerging success story” he maintained.
While talking about Global Innovation Index 2016, Minister said that Pakistan is ranked 119th amongst 128 countries. Hence, this has renewed importance of Innovation on policy formulation in various countries.
''The Vision 2025 has been developed to foster a culture of change and transformation in the overall development scenario of Pakistan which is characterized by unprecedented change and complexity. There is great need for us to create new opportunities by utilizing our strengths'' said the minister . He added that Pakistan's untapped potential provides calls for optimism whereby Pakistan could emerge as a great nation and economic power if resources are generated, managed and used efficiently. Minister said that the target is set to create a roadmap that puts Pakistan in the top 25 economies of the world.
Ahsan Iqbal further added that CPEC is a gift for Pakistan that has opened new avenues for Pakistan’s business and investment environment. CPEC will not only benefit China and Pakistan but will have positive impact on the development of overall region. Keeping in view, the fastest growing and competitive world around us, Minister concluded that it is the time to launch a new wave of productivity, quality and innovation based on a new concept of inclusive, shared and environmentally-responsible growth.