Ministry of Planning
Development & Reform
News Alerts: وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی و ترقی احسن اقبال کی وزارت منصوبہ بندی کے افسران اور میڈیا کے نمائندوں ترقیاتی منصوبوں میں شفافیت کے لئے اٹھائے گئے اقدامات اور ان کے نتائج پر گفتگو ---------- ‏وفاقی حکومت نے۲۰۱۳میں پلاننگ کمیشن کو دوبارہ خودمختار حیثیت دی تاکہ پیشہ ورانہ مہارت کےحامل افراد کے ذریعےمنصوبہ بندی کا عمل مؤثربنایا جاسکے ‏ہم نے منصوبہ بندی کے عمل میں شفافیت کو فروغ دیا اور ٹوکن رقم رکھ کر نئے منصوبے بنانے کے عمل کی حوصلہ شکنی کی، احسن اقبال ---------- ‏وزارت منصوبہ بندی کے قابل اور اہل اہلکاروں اور افسران کی محنت کی بدولت ہم اس قابل ہوئے کہ قومی خزانےکے 550 ارب روپےبچا سکے، احسن اقبال ---------- ‏وزارت منصوبہ بندی کی کوششوں کے نتیجے میں نیو اسلام آباد انٹرنیشنل ائیرپورٹ اور منڈا ڈیم جیسے منصوبوں کو ازسر نو زندہ کیا، احسن اقبال ---------- ‏وزرات منصوبہ بندی نے ماضی کے برعکس سیاسی دباؤ ہر منصوبے بنانے کی بجائے ماہرین کی مشاورت سے قابل عمل منصوبوں کا آغاز کیا، احسن اقبال ---------- ‏وزارت منصوبہ بندی نے ۷۵۲ منصوبوں میں شفافیت اور اخراجات میں توازن رکھ کر۵۵۰ ارب روپے کی بچت کی، احسن اقبال ---------- آج کا دن ہمارے لیے خوشی منانے کا ہے اس وزارت کے افسران اور اہلکاروں کا یہ اعزاز ہے کہ ہم نے اپنی محنت سے 550 ارب کی بچت کی اس رقم کی بچت کو کسی نئے منصوبے میں لگایا جائے گا، احسن اقبال ---------- ہم نے پہلے مکمل طور پر تخمینہ لگایا، انکی فیزیبلٹی رپورٹ بنائی گئی اور پھر فنڈز کی فراہمی کو یقینی بنایا، احسن اقبال ---------- ‏نیلم جہلم پراجیکٹ 80 ارب سے بنایا جانا تھا لیکن غلط منصوبہ بندی اور سیاسی عوامل کی وجہ سے آج اس پر 400 سے شائد ارب لگ رہے ہیں، احسن اقبال ---------- ‏نیلم جہلم منصوبے کے بنیادی حقائق کا تخمینہ ہی نہیں لگایا گیا تھا جسکے سبب اب اتنی بڑی رقم لگ رہی ہے، احسن اقبال ---------- ‏ہمیں این 85 جیسے منصوبے ورثے میں ملے، ہم نے ان کا ازسرنو جائزہ لیا اور منصوبوں کو قابل عمل بنایا، احسن اقبال ---------- ‏لواری ٹنل کے منصوبے ہر بھی تقاریر تو ہر دور میں ہوئی پر فنڈ کسی نے جاری نہیں کیے، احسن اقبال ---------- اسلام آباد ایئرپورٹ کو ایک سفید ہاتھی بنا دیا گیا تھا نہ پانی کا انتظام ہوا نہ رابطہ سڑکیں بنائی گئی نہ ہی بجلی کا بندوبست ہوا، احسن اقبال ---------- رواں سال نیو اسلاآباد ایئرپورٹ پر آپریشن کا آغاز کر دیا جائے گا، احسن اقبال ---------- بلوچستان کی کچی کنال کے لیے فنڈ جاری کیے جس سے صوبے بھر کو پانی کی سہولت میسر ہو جائے گی، احسن اقبال ---------- ‏کرم ٹنگی ڈیم کا منصوبہ بھی کئی سال سے التوا کا شکار تھا، احسن اقبال


VISION 2025

PRESIDENT'S STATEMENT

The Planning Commission has clearly deviated from the past tradition of just preparing a plan without worrying about the implementation. The Vision instead encompasses a roadmap and an implementation strategy for Pakistan...read more...

Mamnoon Hussain
President of Pakistan

PM'S STATEMENT

I am glad to know that the Planning Commission has accomplished the important task of preparing the Pakistan Vision 2025 document. Having a Vision has been a key ingredient of the development strategy of nations that have accelerated their growth in recent times. read more...

Mohammad Nawaz Sharif
Prime Minister of Pakistan

PRELUDE BY MINISTER

There are more than two hundred nations whose flags fly outside the UN Headquarters. Every nation aspires to become a developed country but the reality is that there are only a few dozen nations that are either developed or on the high growth trajectory to join this league of developed nations. read more...

Prof. Ahsan Iqbal
Minister for Planning, Development & Reform




PAKISTAN VISION 2025

The seven pillars of Vision 2025 are based on the imperatives of embracing change and transformation, and to create new opportunities based on our innate strengths. Pakistan's untapped potential provides room for optimism that Pakistan could emerge as a great nation and economic power if resources are generated, managed and used efficiently.

I am confident that this Vision and the subsequent strategy will lay down the foundations of a prosperous, just and harmonious society much before 2025. While going through the document, one can realize that managing the 7th most populous country of the world is a gigantic task but managing it during transition amidst internal and external challenges is even more demanding. I have full faith in the capabilities of my nation and in its ability to manage these challenges. I am glad to know that Vision 2025 acknowledges the forces of technology and knowledge which have entirely changed the way we conduct transactions, interact with each other, create value, and generate business.

"Our Vision today is to make Pakistan next Asian Tiger"